تازہ ترین
برسات میں‘امراض سے بچاو کےلئے احتیاطی تدابیر اختیار کریں:حکیم قاضی ایم اے خالد

برسات میں‘امراض سے بچاو کےلئے احتیاطی تدابیر اختیار کریں:حکیم قاضی ایم اے خالد

لاہور (پاکستان اپڈیٹس  )موسم برسات میں اگر حفظان صحت کا خیال رکھا جائے تو اس موسم کو باعث رحمت بنایا جا سکتا ہے۔ اس موسم میں گرمی اور رطوبت کی زیادتی کی وجہ سے مضر اور خطرناک جراثیم کی افزائش میں تیزی آجاتی ہے جس سے موسمی اور متعدی بیماریاں نمودار ہوتی ہیںسردرد‘بخار‘پیٹ درد‘قے‘متلی‘ دست‘بھوک کی کمی ‘ڈی ہائیڈریشن ‘گیسٹرو کی بڑی علامات ہیں۔ اس مرض کی وجہ آلودہ پانی ‘گلے سڑے پھلوں کا استعمال اور ناقص خوراک ہے اس امر کا اظہارمرکزی سیکرٹری جنرل کونسل آف ہربل فزیشنز پاکستان اور یونانی میڈیکل آفیسر حکیم قاضی ایم اے خالد نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ بیماریوں سے محفوظ رہنے کے لیے پانی کودس منٹ اسٹیل کے برتن میں ابال کر استعمال کریں۔ جسمانی صفائی کا خاص خیال رکھیں دن میں کم از کم ایک بار صابن سے اچھی طرح ضرور نہائیں اور صاف لباس پہنیں گھر اور گلی محلے کی صفائی کا خاص خیال رکھیں اور ان جگہوں پر پانی ہرگز جمع نہ ہونے دیں۔ گھر میں جراثیم کش ادویات اسپرے کریں یاقدیم گھریلوہربل جراثیم کش اسپرے یعنی حرمل‘ گوگل کی دھونی دیں۔ بازاری کھانوں یا کھلے عام فروخت کی جانے والی کھانے پینے کی اشیا سے پرہیز کریں۔ سبزیوں اور پھلوں کو اچھی طرح دھو کر استعمال کریں۔ نرم اور زود ہضم غذا کھائیں‘باسی اشیا سے مکمل پرہیز کریں۔ زیادہ کھانا نہ کھایا جائے۔ روم کولر کا استعمال اور کھلے آسمان تلے سونا نقصان دہ ہے اس لیے کہ نمدار ہوا بدن کے درجہ حرارت کو مناسب نہیں رہنے دیتی اور بخار کی کیفیت پیدا ہوجاتی ہے نیز جوڑوں میں درد شروع ہوجاتا ہے۔سرکہ‘ ادرک ‘لہسن اورلیموں پانی کا استعمال موسم برسات کی بیماریوں کا بہترین علاج ہے۔حکیم خالد نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ اس موسم کی بیماریوں میں نزلہ‘ زکام‘کھانسی‘انفلوئنزا‘ گیسٹرو‘ہیضہ‘پیچش‘اسہال‘بدہضمی‘ پھوڑے‘پھنسیاں‘خارش‘ قے‘متلی‘آشوب چشم سمیت دیگر جلدی بیماریاں شامل ہیں۔

Ginger honey lemonade for summer.

5a-7

So much fun from summer rain

Print Friendly

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

You may use these HTML tags and attributes: <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>